gemstone

جنیوا میں بدھ کو رات گئے ’پِنک ڈائمنڈ‘ کہلانے والا ایک بہت بڑا ہیرا 83 ملین ڈالر سے زائد کی قیمت پر نیلام کر دیا گیا۔ یہ قیمت ماہرین کی طرف سے لگائی گئی اس ہیرے کی متوقع قیمت سے بہت زیادہ رہی۔

اس ہیرے کا وزن 59.6 قیراط ہے اور سَوتھےبی نامی نیلام گھر کے مطابق یہ قیمت آج تک کسی بھی ہیرے کو خریدنے کے لیے ادا کی جانے والی سب سے زیادہ قیمت ہے۔

یہ ہیرا ایک ایسے نامعلوم شخص نے خریدا جس کی طرف سے بولی میں حصہ اس کے ایک نمائندے نے لیا۔ اس سے قبل ماہرین کو توقع تھی کہ یہ ہیرا 60 ملین ڈالر سے زائد تک کی قیمت میں نیلام ہو سکے گا۔ بولی کا آغاز 52 ملین ڈالر سے کیا گیا

خبر ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق یہ بہت بڑا ہیرا 76.325 سوئس فرانک کے عوض فروخت کیا گیا۔ یہ رقم امریکی ڈالر میں 83.425 ملین بنتی ہے۔

خبر رساں ادارے اے پی نے لکھا ہے کہ نیلامی شروع ہونے سے قبل اس گلابی ہیرے کا تعارف یہ کہہ کر کرایا گیا کہ یہ قیمتی پتھر آج تک دنیا بھر میں نیلامی کے لیے پیش کیے گئے سب سے شاندار ہیروں میں سے ایک ہے۔

یہ ہیرا آئیلا IIa ٹائپ کا جوہر ہے جو گلابی رنگ کے ہیرے کے طور پر بہت ہی نایاب ہے۔ جب یہ ہیرا خام حالت میں ملا تھا، تب اس کا وزن 132.5 قیراط تھا۔ اسے سٹائن مَیٹس ڈائمنڈز نامی کمپنی کے ماہر کاریگروں نے دو سال کے عرصے میں تراشا اور یوں موجودہ حالت میں اس کا وزن 59.6 قیراط بن

ہلی مرتبہ یہ ہیرا ’سٹائن مَیٹس پِنک‘ کے نام سے مئی 2003 میں منظر عام پر لایا گیا تھا۔ اسے پہلی مرتبہ نجی طور ہر 2007 میں فروخت کیا گیا تھا اور اس وقت اس کا نام ’دا پِنک اسٹار‘ رکھ دیا گیا تھا۔

جنیوا میں اس نایاب ہیرے کی نیلامی Christie’s نامی نیلامی گھر کی طرف سے فروخت کیے جانے والے دنیا کے سب سے بڑے شفاف لیکن نارنجی رنگ کے ہیرے کی نیلامی کے ایک روز بعد عمل میں آئی۔ یہ نارنجی رنگ کا ہیرا 35.5 ملین امریکی ڈالر کے برابر قیمت پر نیلام کیا گیا تھا۔

سوئٹزر لینڈ کے شہر جنیوا کی مشہور زمانہ جھیل کے کنارے قائم بہت مہنگے ہوٹلوں میں جو نیلامیاں ہوتی ہیں، ان میں دنیا بھر سے آنے والے خریدار انتہائی مہنگے ہیرے جواہرات، آرٹ کے نمونے، بہت پرانی وائن اور نایاب گھڑیاں خریدنے کے لیے بولیاں لگاتے ہیں

Advertisements